اشاعتیں

August, 2016 سے پوسٹس دکھائی جا رہی ہیں

مسجد سے دوری کے غم میں رونے والے کنکر۔۔۔ نرالے سوالی (6)

ایک بزرگ سے کسی نے کہا: میں نے سنا ہے کہ حدیث میں آیا ہے جب انسان مسجد میں سجدہ کرتا ہےتواس کی پیشانی سے مسجد کی مٹی کے ذرے چپک جاتے ہیں۔ جب وہ مسجد سے نکل کر جاتا ہے تو وہ ذرے مسجد کی دوری کی غم میں روتے چلاتے ہیں۔ بتائیے میں ان ذرات کا کیا کروں؟ 
بزرگ نے فرمایا: ان کو چیخنے دو یہاں تک کہ ان کا حلق پھٹ جائے!
سوالی نے کہا: تو کیا ان کا حلق بھی ہوتا ہے؟
بزرگ نے جواب دیا: تو پھر بھلا وہ کہاں سے چیختے ہیں؟

سوشل میڈیا کے علامہ، سکالرز اور استاذ

ایک زمانے میں علامہ کا لقب بہت پٹ گیا تھا، اور پٹا ان کی وجہ سے تھا جو خود کو زبردستی علامہ کہلواتے تھے بلکہ طرہ یہ کہ نہ کہنے والے سے ناراض ہو جاتے تھے، پھر زمانے نے کروٹ لی، خود کو علامہ کہلوانے والوں نے سکالر کہلوانے پر اصرار شروع کر دیا، جتنی تیزی سے کیبل چینل اگے اتنی ہی تیزی سے سکالر پھوٹے، جس طرح برسات میں کھمبیاں اگتی ہیں یا کائی لگتی ہے بالکل اسی طرح آج کل استاذ پیدا ہو رہے ہیں، کل مسیں بھیگتی ہیں آج استاذ ہو جاتے ہیں۔تفسیر اور تجوید کے ابتدائی ڈپلومےحاصل کرتے ہی استاذہ بننے کا رجحان بھی  زوروں پر ہے۔ جس نے کسی جامعہ کی شکل نہیں دیکھی وہی استاذ ہے۔ طب نبوی اور طب جدید دونوں کا بیڑہ غرق اور مریض کا سوا ستیاناس کرنے والے نیم حکیموں کا جمعہ بازار لگتا جا رہا ہے۔ جس کا بس اپنے میدان میں نہیں چلا وہ بڑے فخر سے بتاتا ہے کہ ویسے تو میرا میدان اور ہے لیکن میں تم کو تفسیر کتاب اللہ پڑھانے پر مامور ہوں۔ جھاڑ پھونک المعروف امیر خواتین کا بالمشافہ روحانی علاج بھی ایک سائڈ بزنس کے طور پر جاری ہے۔ یوٹیوب پر پانچویں وڈیو آتے ہی "حضرت استاذ" علمی شہرت کے حامل قرار پاتے ہیں۔ علمی ال…

ِآیا ہے رمضان، جاگ اٹھا ایمان

آيا ہے رمضان ، جاگ اٹھا ايمان 
ہر نيكى آزاد ہوئى اور قيد ہوا شيطان
فجر سے گھنٹوں پہلے ہر گھر ميں ہے بيدارى 
نيند سے سب كو نفرت ہے اور سحرى سب كو پيارى 
بچے تك اٹھ بیٹھے اللہ كى ديكھو شان 
ہر نيكى آزاد ہوئى اور قيد ہوا شيطان 
آيا ہے رمضان ، جاگ اٹھا ايمان 

قبر ميں كام نہ آئیں گے يہ سونا چاندى نوٹ
اب بھی وقت ہے كر لو تم دور عمل كا كھوٹ
اس رمضان ميں پڑھ لو تم تفسير القرآن
ہر نيكى آزاد ہوئى اور قيد ہوا شيطان
آيا ہے رمضان ، جاگ اٹھا ايمان 

عصبيت كے جھگڑے اور سب فرقے بازى چھوڑو
لادينى سازش كى سارى زنجيروں كو توڑو 
روز تراويحوں ميں يہی كہتا ہے قرآن 
ہر نيكى آزاد ہوئى اور قيد ہوا شيطان
آيا ہے رمضان ، جاگ اٹھا ايمان 

سندھی، پنجابى و مہاجر اور بلوچ پٹھان 
سب كا ايك نبى ہے اك كعبہ ہے اك قرآن 
اك اللہ کے بندے بن كر سب اہل ايمان 
روزے ركھو نفرت چھوڑو بن جاؤ انسان 
دعا كرو سب مل كر ميرا جيوے پاكستان
دعا كرو سب مل كر ميرا جيوے پاكستان 
ہر نيكى آزاد ہوئى اور قيد ہوا شيطان
آيا ہے رمضان ، جاگ اٹھا ايمان 

اب دنيا دارى چھوڑو رحمت سے دامن بھر لو
سب رات كى تنہائى ميں رو رو كر توبہ كر لو 
جانے كب چھن جائيں نازؔ اپنے جسم و جان 
ہر نيكى…